نائب وزیراعلیٰ محمد محمود علی نے چھپے لفظوں میں اعتراف کرلیا ہے کہ تلنگانہ تحریک کے دوران وقف اراضیات کے تحفظ کیلئے حوصلے تو بلند تھے لیکن اقتدار میں آتے ہی ہمارے قدم ڈگمگانے لگے ہیں۔ فورٹی وی سے بات کرتے ہوئے نائب وزیراعلیٰ نے کہاکہ گزشتہ دو سال سے محکمہ مال دیگرپروگراموں پر توجہ مرکوز کئے ہوئے تھا۔ جاریہ سال محکمہ مال کے سال کے طورپرمنایا جائے گا۔ انہوں نے بتایاکہ پہلے محکمہ کی کارکردگی کو بہتربنایاجائے گا اور اس کے بعد وقف جائیدادوں کا تحفظ کیاجائے گا۔نائب وزیراعلیٰ نے اقلیتی بجٹ کے غیرموثر استعمال کا اعتراف کرتے ہوئے کہاکہ عملے کی کمی کی وجہ سے یہ ممکن نہیں ہو پایا ہے لیکن آئندہ مالیاتی سال سے بجٹ کو مکمل خرچ کرنے کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔نائب وزیراعلیٰ نے بتایا کہ مابھومی ویب سائیٹ پر ان جائیدادوں کی تفصیلات فراہم نہیں کی گئی ہیں جو کہ متنازعہ ہیں۔

Post a Comment

 
UA-24837031-1